وروستي

د امام الباني لنډہ پیژندنه‎

دامام الباني لنډہ پیژندنه🍒
محمدناصرالدین الالباني بن نوح نجاتي🌲چی پہ کال ۱۳۳۳ھجری کی چي دہ۱۹۱۴میلادی سرہ سمون خوري دالبانیاپه یوښارکی چي قاشقودرۃ په نوم شھرت لری پیداشویدي
کلہ چي دي دنه کالو په عمرشو په البانیاکی یوسیکولرنظام رامینځ ته شو چی مسلمانانوتہ یوچیلنج و
تردی چي ددہ والدصاحب مجبورہ شوچي دخپل دین ساتنی پہ خاطرلہ خپل ھیوادڅخه ھجرت وکړی ھمغہ وہ چی دخپلی کورنئ سرہ دسوریئ په لورمھاجرشواوددمشق نومی ښارکي خپل ژوندتہ دوام ورکړ
اودخپل ځوئ اوخوږبچی لپارہ ئی په میشته ښوونځی کی داخله واخسته خوھرکلہ چی ئی والدصاحب وکتل چی داقسم ښوونځی نشی کولائ چی له چاڅخه یومنتج عالم جوړکړی
بالآخرہ له ښوونځی څخہ ئی بیرتہ لری کړہ اوپخپل کورکی ئی ورتہ ښوونی شروع کړی
دیادونی وړدہ چی ددہ والد صاحب خپلہ دساعت جوړونکی ھم وو چی داکسب ترینہ دہ ھم زدہ کړی وو چہ وخت ناوخت بہ ئی دوالدصاحب سرہ پکی مرستہ کولہ ترھغی چی شل کلن شوالله ورتہ دعلم حدیث محبت پہ زړہ کیښود چی ددی سبب ئی دالمنارپہ نوم یو مجلہ وہ اوپکی بہ دحدیثوخپرونی کیدی داددہ لپارہ ددی جوگہ شوہ چی دحدیثو۔ لازیات کتابونہ ترلاسہ اوبالآخرہ مطالعہ کړی
چی پہ دغہ وخت کی دہ یوکتاب پہ ډیرہ دقیقہ کچہ مطالعہ کړہ چی پہ احیاءعلوم الدین باندی دامام عراقی صاحب تحقیق و اوډیری علمی استفادی ترینہ لاس تہ راوړی
پہ ھمدغہ لوری دہ خپل علمی پرمختگ تہ دوام ورکړ تردی چی دنړئ دلویوعلماو څخہ شمیرل کیږی
کلہ کلہ بہ پہ خپلہ مکتبہ دډیروساعتونولپارہ پہ ولاړہ پہ مطالعہ بوخت وو
چی داکارډیرھمت غواړی امام البانی بہ دعلم سرہ سرہ دعوت ھم کولو چی څہ وخت لپارہ دسوریئ پہ محبس کی بندی شو
کلہ چی امام البانی بھر دنیاکی شھرت حاصل کړہ نودسعودی عربستان یوپیاوړی پوھنتون چی پہ مدینہ منورہ کی شتون لری وغوښتل شوترڅوچی دحدیثوخدمت پہ تدریسی شکل ھم وکړی
دری کالہ پہ الجامعہ الاسلامیہ کی دیوښوونکی پہ صفت و چی بیادځینی مشکلاتولہ وجی نہ اردن تہ لاړچی ھلتہ ئی خپل علمی ترقئ تہ دوام ورکړ اوډیرکتابونہ ئی ولیکل اوپہ خاص توگہ دحدیثو پہ لټنہ اوتحقیق کي
چی دہ دوہ سوہ څخہ زیات تالیفات رسائل اواجزاءلری
چی بیلگی پہ توگہ ترینہ ھغہ مشہور کتابونہ ذکرکوو(۱)سلسلة الاحاديث الصحيحة(٢)سلسلة الأحاديث الضعيفة(٣)تحقيق سنن النسائى(٤)وابي داود(٥)والترمذي(٦)وابن ماجه(٧)تحقيق إرواءالغليل في تخريج احاديث منارالسبيل(٨)التعليقات الجيادعلى زادالمعادوهذامفقود(٩)تحريم الالات الطرب(١٠)جلباب المراةالمسلمة(١١)اداب الزفاف(١٢)غاية المرام(١٣)النصيحة(١٤)تحقيق الترغيب والترهيب للمنذري(١٥)صلاة التراويح(١٦)قيام الليل(١٧)حجة النبي صلى الله عليه وسلم كمارواهاجابر(١٨)صفة صلاة النبي صلى الله عليه وسلم من التكبيرالى التسليم كانك تراها(١٩)احكام الجنائزوبدعها(٢٠)مناسك الحج والعمرة(٢١)الاجوبةالنافعة(٢٢)الثمرالمستطاب في فقه السنة والكتاب(٢٣)مختصرالبخاري(٢٤)مختصرمسلم(٢٥)صحيح الجامع الصغير(٢٦)ضعيف الجامع الصغير(٢٧)تحقيق مواردالظمآن(٢٨)تحقيق الادب المفردللبخاري(٢٩)الحديث حجةٌبنفسه في العقائدوالاحكام(٣٠)تحقيق العلوللامام الذهبي(۳۱)الوسيلة(۳۲)تحقیق الشمائل للترمذی(۳۳)الذب الاحمد عن مسند الامام احمد(۳۴)🌿ددینہ ہم زیات کتابونہ دی خودوخت دوجی نہ پہ ھمدی اکتفاکووالسيلة امام البانی ډیرپرھیزگارہ او صالحہ عالم وودحق پہ بارہ کی ئی دھیڅ چالحاظ نہ کوو ددی وجی نہ پہ یوځائ وخت ندی تیرکړی
دامام البانی ددی علمی خدماتوسرہ سرہ دہ ډیروباطلوډلومخہ ھم نیولہ
چی پہ لومړی سر کی فتنہ دخوارجواوتکفیریانووہ چی دھغوئ سرہ ددہ مناظری اوگرم بحثونہ ترسرہ شوی وو
بل داخوانیانوپہ نوم ډلی سرہ ھم ددہ دوامدارہ مناقشی شویدی
بل دہ قادیانیت دہ باطلي ډلي پہ مقابلہ کي ھم ددہ ډیر جہوددی
بل دمذھبی تعصب یئ ډیر سخت مخالفت کوو
اوټولومسلمانانوتہ ئی پہ قران اوسنت عمل کول په فھم دہ سلفو صالحینو دعوت ورکوو ددینہ علاوہ دہ ټولوباطل پرستوډیرسخت مخالف اومبارزہ کونکي وو
 امام البانی ددی خدماتوڅخہ روستہ دہ(۸۷)کلنوپہ عمرکی لہ  دي فاني دنیاڅخہ سترگی پټی کړی نن ټول مسلمانان عرب اوعجم ددہ دعلم څخہ استفادہ کوی تردی چي دحرمینوپہ منبر ھم دشیخ البانی نوم ترغوږاوریدل کیږی واقعًاچی الله تعالی پہ خپل دین انسان تہ پہ دنیااواخرت کی عزت ورکوی
اللہ دی شیخ البانی څخہ داجھودقبول کړی اواللہ دی دټولوعلماسرہ جنت الفردوس تہ داخل کړی
داماډیرمختصرولیکہ ددہ بارہ کتابونہ لیکل شویدی(حياة الالباني)الالباني كماعرفته)كوكبةٌمن أئمةالهدٰى ومصابيح الدجٰى)داورپسی دزیات تحقیق لپارہ وگورئ

څرګندونه مو لاندې وليکئ

ستاسو برېښناليک خوندي دی.


*